سانحہ ماڈل ٹاؤن کے بے گناہوں کے خون کا حساب بشکل قصاص ہمارے ایمان کا حصہ بن چکا ہے۔ چوھدری محمد اعظم

 Chaudhry Mohammad Azam

Chaudhry Mohammad Azam

پیرس (اے کے راؤ سے) صدر منہاج القرآن فرانس چوھدری محمد اعظم اور صدر پاکستان عوامی تحریک فرانس حاجی محمد اسلم چوھدری نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ ڈاکٹر قادری کی پاکستان آمد کے ساتھ ہی قاتل برادران کے معاونین متحرک ہو گئے ہیں، پانامہ کے ہنگامے اور JIT کے ڈرامے میں ماڈل ٹاون سانحہ سے صرف نظر کرنے والے بھول رہے ہیں کہ وہ کسی اور کیس میں نہیں سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ہی لٹکیں گے۔

حاجی محمد اسلم چوھدری کا کہنا تھا کہ تبدیلی کے خواہشمندوں کو چاہیے کہ وہ پچھلے چند ماہ کی میڈیا رپورٹ پر نظر دوڑائیں جب ڈاکٹر قادری نے کہا تھا کہ تلاشی نواز شریف کی ہو گی مگر مال خان صاحب کی جیب سے برآمد ہوگا۔ اس وقت کے حالات کیا تھے آج کیا ہیں سمجھنے والوں کے لیے سوچنے کا مقام ہے۔

چوھدری محمد اعظم نے کہا کہ انصاف بشکل قصاص ہمارے ایمان کا حصہ ہے، ہم آخری دم تک انصاف کی جنگ لڑیں گے۔ جسٹس باقر نجفی کمشن کی رپورٹ حاصل کرنے کیلئے پونے تین سال سے عدالتی جنگ جاری ہے اور آخری سانس تک جاری رہے گی۔

انہوں نے کہا کہ قائد تحریک ڈاکٹر طاہرالقادری کا یہ کہنا کہ پانامہ جے آئی ٹی ن لیگ کا الیکشن سیل ہے جس میں آئندہ الیکشن کا منشور تیار ہو رہا ہے۔ لمحہء فکریہ ہے ان احباب کے لیے جو اس سسٹم سے تبدیلی کی امید لگا بیٹھے ہیں۔ قوم کے علم میں ہے آئین، قانون اور عدالتیں کس حال میں ہیں۔

سانحہ ماڈل ٹاؤن کیس پر پیش رفت رک چکی۔ اصلاحات کے بغیر انتخابات ہوئے تو یہ سابق انتخابات جیسا ایک ڈرامہ ہو گا، یہ الیکشن 2008 اور 2013 سے مختلف نہیں ہونگے۔ سانحہ ماڈل ٹاؤن کے بے گناہوں کے خون کا حساب بشکل قصاص ہمارے ایمان کا حصہ بن چکا ہے۔