قتل لندن میں! پرچہ اسلام آباد میں، بات سمجھ سے بالا تر ہے۔ طارق چوھدری

Tariq Chaudhry and Rao Khalil Ahmed

Tariq Chaudhry and Rao Khalil Ahmed

پیرس (اے کے راؤ) پیرس کی معروف شخصیت طارق چوھدری نے ڈاکٹر عمران فاروق کے قتل کی ایف آئی آر کے اسلام باد میں اندراج پر میڈیا پرسن راؤ خلیل احمد سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈاکٹر عمران فاروق 16 ستمبر 2010 کو لندن میں قتل ہوئے 5 سال تک سکاٹ لینڈ یارڈ نے انویسٹی گیشن کی ملزمان کے تعین کے بعد پاکستان کے وفاقی تحقیقاتی ادارے انسداد دہشت گردی ونگ کی مدعیت میں متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین سمیت سات افراد پر قتل کے مقدمہ کا پاکستان میں اندرارج سمجھ سے بالا تر ہے۔

طارق چوھدری کا کہنا تھا کہ ورثہ کے ہوتے ہوئے وفاقی ادارے کی مدعیت مقدمے پر سیاست کی جانب اشارہ ہے ۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ قتل لندن میں ہوتا ہے الطاف حسین لندن میں موجود ہیں ،مقدمے کو پاکستان کی جانب دھکیلنا بھی پاکستان کی سالمیت کے خلاف سازش ہے۔

طارق چوھدری نے وزیر داخلہ چوھدری نثار علی سے سوال کرتے ہوئے کہا کہ 17 جون 2014ء سانحہ ماڈل ٹاون کے 14 شہداء کے ورثہ آج تک انصاف کے متلاشی ہیں اور سانحہ ماڈل ٹاؤن کے قاتل اور منصوبہ ساز آزاد ہی نہیں مسند اقتدار پر براجمان ہیں ان کو انصاف کب ملے گا۔