پاکستان دنیا بھر کے جیلوں میں قید پاکستانیوں کی وطن واپسی کیلئے رابطوں کا آغاز کرے گا

Prisoner

Prisoner

پیرس (زاہد مصطفی اعوان سے) پاکستان دنیا بھر کے جیلوں میں قید پاکستانیوں کی وطن واپسی کیلئے رواں ماہ سے مختلف مملاک کے سفارتخانوں سے رابطوں کا آغاز کرے گا۔

دنیا بھر کے 70 سے زائد ممالک میں پاکستانی قیدیوں کی تعداد 6700 سے زائد ہو چکی ہے۔ سب سے زیادہ پاکستانی قیدی سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، برطانیہ اور امریکہ میں قید ہیں۔ ان میں اکثریت معمولی جھگڑے، منشیات فروشی، غیرقانونی رہائش، اور مختلف نوعیت کے معمولی جرائم میں ملوث ہونےپر گرفتار ہیں۔

یورپین و شمالی و جنوبی امریکہ کے ممالک، ارجنٹائن میں 2۔ بلجیئم 5۔ جارجیا 3۔ برطانیہ 365۔ امریکہ 355۔ آسٹریلیا 26۔ آسٹریا 9۔ چلی 13۔ جرمنی 88۔ یونان 109۔ برازیل 3۔ اٹلی 229۔ میکسیکو 9۔ جاپان 27۔ چین 211۔ ناروے 15۔ سپین 107۔ کے علاوہ دنیا بھر کے مختلف ممالک کی جیلوں میں پاکستانی مختلف نوعیت کے جرائم کے الزام میں قید ہیں۔

حکومت پاکستان نے دنیا بھر کے مختلف ممالک کے جیلوں میں قید پاکستانیوں کی وطن واپسی کیلئے وزارت خارجہ کو قیدیوں کی واپسی کے حوالے سے مختلف ممالک کے سفارتخانوں اور سفیروں سے براہ راست رابطہ کرنے اور پاکستانی قیدیوں کی واپسی کے حوالہ سے بات چیت کرنے کا حکم جاری کیا ہے۔