پاکستانی قوم بھارتی اشتعال انگیزی کیخلاف یکجان، رہنماؤں نے واضح پیغام دیدیا

Nawaz Sharif

Nawaz Sharif

اسلام آباد (جیوڈیسک) پارلیمانی جماعتوں نے وزیراعظم کو یقین دلایا ہے کہ مسئلہ کشمیر اور بھارتی جارحیت کے معاملات پر وہ حکومت کے ساتھ ہیں۔ وزیراعظم نواز شریف کے زیر صدارت پارلیمانی رہنماؤں کے اجلاس کے جاری اعلامیہ میں کشمیریوں کی سیاسی، اخلاقی اور سفارتی حمایت جاری رکھنے کا عزم کیا گیا ہے۔

اعلامیے میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ مشرقی تیمور اور جنوبی سوڈان کی طرح کشمیری عوام کو حق خودارادیت دیا جائے۔ پاکستان کشمیری عوام کے حق خودارادیت کے مطالبے کی حمایت کرتا ہے۔ اجلاس میں دہشتگردی اور انتہاء پسندی کیخلاف نیشنل ایکشن پلان پر مکمل عملدرآمد کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا گیا کہ وزیراعظم بیرونی خطرات سے نمٹنے کیلئے قومی یکجہتی پیدا کریں۔ اعلامیے میں کہا گیا کہ بھارت کی جانب سے مسلسل جارحیت اور فائرنگ خطے کے امن و سلامتی کیلئے خطرہ ہے۔ بھارتی فوج نے حالیہ دنوں میں 110 سے زائد بے گناہ اور معصوم کشمیریوں کو شہید کیا۔ 87 روز سے جاری مظالم کے دوران 700 کشمیری بینائی سے محروم ہو چکے ہیں۔ بھارت بے بنیاد الزام تراشی کے ذریعے مقبوضہ کشمیر کی صورتحال سے توجہ ہٹانا چاہتا ہے۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان اور کشمیر کاز آج پہلے سے زیادہ مضبوط ہے۔ اس پر پوری قوم اور سیاسی قیادت متحد ہے۔ بھارت کشمیریوں کی تحریک آزادی کو بربریت سے مزید نہیں دبا سکتا۔