نوجوان مسلم کا آئیڈیل کوئی انتہا پسند نہیں بلکہ نواسہ رسول حضرت امام حسین ہیں، امام شاہد تمیز

Imam Shahid Tameez

Imam Shahid Tameez

برمنگھم (ایس ایم عرفان طاہر سے) نوجوان مسلم کا آئیڈیل اور ہیرو کوئی انتہا پسند یا دہشتگرد نہیں بلکہ نواسہ رسول حضرت امام حسین ہیں ، شہداء کربلا نے اللہ اور اسکے رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے محبت و عشق کا حق اپنی جانوں کے نذرانے پیش کر کے ادا کیا لیکن آمریت کو تسلیم نہیں کیا، تا قیامت اہل ایمان یزید کی یزید یت اور اسکے ساتھیوں پر لعنت اور شہداء کربلا پرعقیدتوں کے پھول اور درود و سلام کے نذرانے بھیجتے رہیں گے۔ ان خیالات کا اظہار معروف مذہبی سکالر و انچارج ضیاء الامہ سنٹر بوزلے گرین امام شاہد تمیز نے ضیاء الامہ سنٹر بوزلے گرین میں محفل ذکر حسین کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

اس موقع پر علامہ پیر محمد احمد زمان جماعتی نقشبندی ، علامہ محمد طاہر ، علامہ محمد مبشر ، قاری علی محمد قادری ، حاجی محمد اعظم ، محمد صدیق ، محمد اشفاق ، محمد خالد ، حاجی عاشق حسین ، قمر خلیل اور دیگر نے خصوصی شرکت کی ۔ امام شاہد تمیز نے کہاکہ تا ریخ اسلام میں شہداء کربلا کی لازوال قربانی کی کوئی مثال نہیں ملتی ہے ۔ انہو ں نے کہاکہ تا قیامت جب تک کوئی ایک بھی اہل ایمان زندہ ہے تو شہداء کربلا کا تذکرہ ہوتا رہے گا۔ انہوں نے کہاکہ آل نبی صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم سے محبت و عقیدت کا یہی تقا ضا ہے کہ اپنی زندگیوں میں احکاما ت الہیٰ اور اتباع رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کو نافذ کیا جائے۔

علامہ پیر محمد احمد زمان جماعتی نے کہاکہ شہداء کربلا کے صدقے میں آج ہمیں کلمہ طیبہ نصیب ہو ا اور ہما رے ایما ن سلامت ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اگر دنیا و آخرت میں کامیابی و کامرانی درکار ہے تو پھر اہلبیت اور صحابہ کرام کی زندگیوں کی پیروی کو اپنا نصب العین بنانا ہو گا ۔ علامہ محمد طا ہر نے کہاکہ امام حسین نے ظالم اور جابر حکمران کے سامنے کلمہ حق بلند کرکے اسلام کی حقیقی تعلیمات اجاگر کیں ۔ انہوں نے کہاکہ آمریت کے خلا ف بغاوت سب سے بڑا جہا د ہے ۔ انہوں نے کہاکہ مسلمانوں کے اسلامی سال کا آغاز بھی قربانی سے ہوتا ہے اور اس کا انجام بھی قربانی ہی پر ہوتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ شہداء کربلا نے حق و صداقت پر قائم رہتے ہوئے صبر و برداشت کا عملی ثبوت پیش کیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ بحیثیت مسلمان ہما رے مذہب اور عقیدے کا یہ تقاضا ہے کہ مرتے دم تک شائر اسلام پر پہرا دیا جا ئے ۔ علامہ محمد مبشر نے کہاکہ شہداء کربلا کی قربانی رائیگا ں نہیں جا ئے گی تا قیا مت اللہ رب العزت انکی اس لا زوال اور بے مثال قربانی کے صدقے مسلمانوں کو عروج اور غلبہ نصیب فرمائے گا۔ انہوں نے کہاکہ ہمیں چا ہیے کہ اس ماہ مبارک میں زیادہ سے زیادہ عبا دات صدقا ت و خیرات اور محافل کا اہتمام کیا جائے اور ان مقدس نفوس کو یاد کیا جائے جنہوں نے اپنی قیمتی جانیں دین اسلام کی سربلندی اور بقاء کی خا طر اللہ کے راستے میں قربان کردیں ۔ انہوں نے کہاکہ شہداء کربلا کا راستہ اپنا کر ہی ہم دنیا سے نفرت ، برائی اور بدی کا خاتمہ کر سکتے ہیں ۔ محفل کے اختتام پر صوفی محمد یعقو ب چشتی کے ایصال ثواب کے لیے خصوصی دعا کی گئی اور شرکاء محفل میں حسینی لنگر بھی تقسیم کیا گیا۔