بارسلونا میں دہشت گردی قابل مذمت ہے، دنیا متحد ہو کر دہشت گردی کا مقابلہ کرے، علی رضا سید

Ali Raza Syed

Ali Raza Syed

برسلز (پ۔ر) کشمیر کونسل یورپ (ای یو) کے چیئرمین علی رضاسید نے سپین کے شہربار سلونا میں جمعرات کے روز دہشت گردی کے واقعے کی سخت الفاظ میں مذمت کی ہے جس میں تیرہ فراد مار گئے اوراسی سے زائد زخمی ہوئے ہیں۔

اپنے ایک بیان میں علی رضاسید نے اس واقعے پر سخت افسوس ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ یہ ایک دردناک واقعہ ہے جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے۔ ہم اس موقع پر سپین کے عوام خصوصاً متاثرین کے خاندانوں کے ساتھ گہری ہمدردی اور یکجہتی کا اظہارکرتے ہیں۔

انھوں نے کہاکہ دہشت گردی کسی بھی صورت میں قابل قبول نہیں۔دنیاکو ہرقسم کی دہشت گردی کے خلاف متحد ہوجاناچاہیے۔ بارسلونا میں دہشت گردانہ حملہ ایک افسوسناک اور آنکھوں کو اشک بار کردینے والا واقعہ ہے ۔کسی بھی مہذب معاشرے میں اس طرح کے حملوں کی کسی بھی صورت میں کوئی گنجائش نہیں۔ان حملوں کا صحیح جواب یہ ہے کہ ہر آدمی اپنی ذمہ داری کا مظاہرہ کرے اور دہشت گردی اور دہشت گرووں کو روکے۔ دنیا متحد ہوکراور یکجہتی دکھا ان کا مقابلہ کرے۔ دہشت گرد انسانیت کے دشمن ہیں۔

عالمی امن کے تحفظ اور دہشت گردی جیسے ناسو ر کے خاتمے کے لئے موثر حکمت عملی اور بھرپورعملی اقدامات کرنے کی ضرورت ہے۔
علی رضاسید نے کہاکہ بے گناہ لوگوں کا قتل عام دنیاکے کسی بھی خظے میں قابل قبول نہیں۔ ہمیں ان لوگوں کے خلاف بھی کھڑاہوناہوگا جو اس طرح کے واقعات کو استعمال کرکے انتہاپسندانہ خیالات پھیلاتے ہیں اور معاشرے میں خوف اور نفرت پیدا کرتے ہیں۔

امید ہے کہ عالمی برادی دہشت گردی، انتہاپسندی، منافرت اور نسل پرستی کے خلاف اٹھ کھڑی ہوگی۔ انھوں نے واضح کیا کہ د ہشت گرد چاہتے ہیں کہ وہ سوسائٹی میں نفرت کو ہوا دیں تاکہ دنیاکا امن تباہ ہوجائے۔ ہمیں ان کی اس سازش سے آگاہ ہوناچاہیے اور تحمل اور ایک دوسرے کے احترام کے ذریعے اس سازش کو روکنا ہے۔