بیرسٹر سلطان محمود تین روزہ دورہ فرانس کے بعد واپس وطن روانہ

Barrister Sultan Mahmood

Barrister Sultan Mahmood

پیرس،سٹراس برگ (زاہد مصطفی اعوان) آزاد کشمیر کے سابق وزیراعظم و پی ٹی آئی کشمیر کے صدر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ یورپی پارلیمنٹ کشمیر پر اپنا نمائندہ مقرر کرے کیونکہ بھارت اس وقت نہ صرف مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی کر رہا ہے بلکہ سیز فائر لائن کی بھی کھلی خلاف ورزیاں کر کے ایک انتہائی تشویشناک صورتحال پیدا کئے ہوئے ہے۔ اس سلسلے میں یورپی پارلیمنٹ فوری طور پر کوئی قدم اٹھائے کیونکہ پاکستان اور بھارت دونوں ایٹمی طاقتیں ہیں اور بھارت کی طرف سے یہ خلاف ورزیاں ایک بڑی جنگ کا پیش خیمہ ثابت ہو سکتی ہیں۔

مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی پامالی پر یورپی پارلیمنٹ نے پہلے بھی ایک رپورٹ پاس کر رکھی ہے اسی طرح جب اوڑی میں گمنام قبروں کی دریافت ہوئی تھی تو اس وقت بھی یورپی پارلیمنٹ نے ایک مذمتی قرارداد پاس کی تھی۔ اب جبکہ اس خطے میں حالات دن بدن ابتر ہو رہے ہیں تو عالمی برادری کا خاموش تماشائی بنے رہنا اپنی ذمہ داریوں سے عہدہ برا نہ ہونے کے مترادف ہو گا۔ یورپی پارلیمنٹ بھارت کے اس جارحانہ رویے اوورسیز فائر لائن کی خلاف ورزیوں اور مقبوضہ کشمیر میں جاری مظالم کے خلاف بھارت اور یورپی یونین کے درمیان اقتصادی و تجارتی معاہدہ ہونے سے رکوائے۔ اگرچہ یہ معاہدہ پہلے بھی اسی وجہ سے اراکین یورپی پارلیمنٹ نے رکوائے رکھا اب میری شنید ہے کہ اگلے ایک دو ماہ میں یہ معاہدہ دوبارہ ہونے جارہا ہے لہذا یورپی پارلیمنٹ اسے رکوائے جو کہ پہلے بھی رکا ہوا تھا۔

ہمارا مطالبہ ہے کہ جب تک بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم اور سیز فائر لائن کی خلاف ورزیاں بند نہیں کرتا اس وقت تک اس معاہدے کو فوری طور پر ہونے سے روکا دیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے اسٹراس برگ (فرانس) میں یورپی پارلیمنٹ میں ممبران یورپی پارلیمنٹ کو ایک تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر یورپی ممبریورپی پارلیمنٹ و پاکستان کے انتخابات میں یورپی یونین کے ابزرور مشن کے سربراہ مسٹر مائیکل گیہلر(Michael Gahller)، ممبر یورپی پارلیمنٹ و یورپی پارلیمنٹ کی امور خارجہ کمیٹی کے چیئرمین مسٹر ایلمر بروک، ممبر یورپی پارلیمنٹ امجد بشیر، ممبر یورپی پارلیمنٹ مارک تربیلا(Marc Tarbella)، ممبر یورپی پارلیمنٹ سجاد کریم اور دیگر بھی موجود تھے۔

اس موقع پر پاکستان کے انتخابات میں یورپی یونین ابزرور مشن کے سربراہ مسٹر مائیکل گیہلر نے اس خطے میں حالات کی سنگینی اور تشویش پر یورپی پارلیمنٹ کی توجہ دلوانے کے لئے کارروائی کا اعلان کیا۔ اسی طرح بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے یورپی پارلیمنٹ کی خارجہ امور کمیٹی کے چیئرمین ایلمر بروک سے بھی خصوصی ملاقات کی۔ ایلمر بروک نے بھارت کی طرف سے مقبوضہ کشمیر میں جاری خلاف ورزیوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم اس سلسلے میں اپنا کردار ادا کریں گے۔بیرسٹر سلطان محمود تین روزہ دورہ فرانس کے بعد واپس وطن روانہ ہو گئے ہیں۔