پاکستانی ثقافت اور موسیقی کا فروغ میری اولین ترجیح ہے۔ ناسا منیر

Nasa Munir

Nasa Munir

برمنگھم (نوید چوھان) برطانیہ میں مقیم پاکستانی مختلف شعبوں میں پاکستان کا نام روشن کر رہے ہیں۔ اور نوجوانوں اور نئی نسل نے اب ہر شعبہ میں ایک نئی جدت پیدا کی ہے۔ ناسا منیر بھی ان ہی نوجوانوں میں شامل ہیں جو برٹش کا پاکستانی کمیونٹی کا فخر ہیں۔ ناسا کا تعلق برطانیہ میں برمنگھم اور پاکستان میں راولپنڈی سے ہے۔ ناسا منیر بزنس مین ہیں لیکن ان کا ایسا ٹیلنٹ جو اب دنیا کے سامنے آ رہا ہے وہ ہے فن موسیقی سے ان کا پیار اور وہ اب اس شعبے میں دن بدن مقبول ہو رہے ہیں۔

ناسا منیر نے چھ سال کی عمر میں باقاعدہ گانے کا آغاز کیا اور شروع میں محمد رفیع کے گانوں سے اپنے کیرئیر کا آغاز کیا۔ ناسا نے کلاسیکل موسیقی کی باقاعدہ ٹریننگ استاد عنصر خالد سے حاصل کی۔ ناسا نے اس سے پہلے تین گانے”ماہی” ، ” سائیں” اور “منوا رے”ریلیز کی جنھیں بہت مقبولیت حاصل ہوئی او اب حال ہی میں انھوں نے اپنا ایک اور گانا ” ود آوٹ یو” ریلیز کیا ہے جسے نوجوانوں میں بے حد مقبولیت مل رہی ہے اور نہ صرف برطانیہ کے چارٹس میں بلکہ پوری دنیا میں بھی اس گانے نے تہلکہ مچا رکھا ہے۔

ناسا کا یہ گانا ان کا پہلا ویڈیو گانا ہے جسے بہت خوبصورت انداز میں فلمایا گیا ہے۔ میڈیا نمائندگان سے بات چیت میں ناسا منیر کا کہنا تھا کہ میرا مشن لوگوں تک بہترین موسیقی پہنچانا ہے۔ اور میں اچھی موسیقی پر یقین رکھتا ہوں اور اس فن کو میں ایک نئی جدت دینا چاہتا ہوں۔تاکہ لوگوں تک صیح اور اصلی موسیقی پہنچے جو واقعی موسیقی ہو اور اس سے کمیونیٹز کو ایک دوسرے کے قریب لانے میں بھی مدد ملے گی۔

ناسا کا مزید کہنا تھا کہ اچھی موسیقی ناپید ہے میری کوشش یہی ہو گی کہ میں ثقافت کی ترویج کے ساتھ ساتھ موسیقی کی ترویج کا کام بھی کروں ۔ ناسا پیشہ کے اعتبار سے گرافک ڈیزائنر ہیں اور اگلے ماہ برمنگھم میں ایشیائی فیسٹیول میں بھی پرفارم کر رہے ہیں جہاں عادل رے اور برطانیہ، پاکستان اور بھارت سے نامور فنکار شرکت کریں گے۔