عوام کے منتخب وزیر اعظم کے خلاف فیصلے کو انصاف کا جنازہ قرار دیتے ہیں، زبیر اقبال کیانی

PMLN UK

PMLN UK

لوٹن برطانیہ (نمائندہ خصوصی) پاکستان مسلم لیگ ن آزادکشمیر کے صدر زبیر اقبال کیانی، راجا محمد ادریس سیکرٹری جنرل پاکستان مسلم لیگ ن برطانیہ، چوہدری جہانگیر قائم مقام صدر ن لیگ آزاد کشمیر برطانیہ ، مرزا توقیر جرال سینئر نائب صدر ٹو سینٹر مسلم لیگ ن یوتھ ونگ ، راجہ محمد نواز مرکزی نائب صدر مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ ، راجا توصیف کیانی کو آرڈینٹر یوتھ ونگ پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ ، سردار نفیس اگہاروی نائب صدر پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ ، راجا امجد فاروق ترجمان پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ ، طارق جمیل راجا جنرل سیکرٹری ساؤتھ ذون پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ ، سردار محمد فاروق خان فنانس سیکرٹری پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ ، راجا ماسٹر نثار جنرل سیکرٹری پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر لیوٹن برطانیہ برانچ و دیگرنے مشترکہ بیان میں پاکستانی عوام کے منتخب وزیر اعظم کے خلاف فیصلے کو عدالتی تاریخ کا ایک اور سیاہ فیصلہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ملکی ترقی کے دشمنوں نے مخصوص ایجنڈہ پر کام کر کہ جو گل کھلائی اسے ملکی تاریخ کے سیاہ دن کے طور پر یاد رکھا جائیگا۔

ملک کی سب سے بڑی عدالت سے اس قسم کے فیصلوں کی توقع نہیں کی جا سکتی تھی ایسے فیصلوں پر سوائے افسوس کے اور کیا ہی کیا جا سکتا ہے میان محمد نواز شریف کو انتہائی غیر منصفانہ فیصلے کی بھینٹ چڑھا کر اپنے منصب سے ہٹا دیا گیا پاکستان کی ترقی پر کاری ضرب لگائی گئی ہم بتلا دینا چاہتے ہیں کہ اس فیصلے میاں صاحب کو ان کے عہدے سے تو ہٹا سکتے ہیں لیکن میاں صاحب عوام کے دلوں پر راج کرتے ہیں عوام کے دلوں سے ہر گز نہیں نکالا جا سکتا۔ عوام بخوبی سمجھ چکی ہے کہ نواز شریف کا قصور یہ تھا کہ وہ مملکت خداد اسلامی جمہوریہ پاکستان کی تقدیر بدلنا چاہتے ہیں۔

پاکستان کو اقوام عالم میں ترقی یافتہ ملکوں کی صف میں کھڑا کرنے کے عزم پر بین الاقوامی سازش کے تحت نواز شریف کو راستے سے ہٹانے کے لئے سیاسی میدان میں شکست کھانے والے سازشی عناصر انشا اللہ تعالیٰ اپنے مذموم مقاصد میں ناکام ہوں گے۔ نواز شریف کی پاکستان اور پاکستانی عوام کے لئے خدمات سنہرے حروف میں لکھی جائیں گی ۔ مورخین اسے ملکی تاریخ کے غلط ترین فیصلوں میں سب سے اوپر لکھیں گے۔