ایک رپورٹ نے شریف برادران کو کرپٹ، دوسری نے قاتل ثابت کر دیا۔ صدر عوامی تحریک ڈنمارک

PAT Denmark

PAT Denmark

کوپن ہیگن (اسپیشل رپورٹر) پانامہ لیکس پر جے آئی ٹی کی رپورٹ نے نواز شریف اور ان کی فیملی کو خائن، لٹیرا اور بددیانت ثابت کردیا ہے۔ جب کہ سانحہ ماڈل ٹاون پہ انکے اپنے بنائے ہوئے ایک رکنی جسٹس باقر کمیشن کی رپورٹ شہباز شریف اور نواز شریف کو پاکستان عوامی تحریک کے کارکنان کا قاتل ثابت کر چکی ہے۔

پاکستان عوامی تحریک ڈنمارک نے اپنی پریس ریلیز میں جسٹس باقر نجفی کی رپورٹ عام کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ قومی سلامتی کے اداروں پر یہ فرض عائد ہوتا ہے کہ جس طرح سپریم کورٹ کی بنائی گئی جے آئی ٹی احسن انداز سے پانامہ لیکس کیس کو آگے بڑھا رہی ہے اسی طرح جسٹس باقر نجفی کی رپورٹ کے مطابق بھی جلد از جلد اس کیس کی کاروائی کو آگے بڑھایا جائے اور ہمارے کارکنان کے قاتلوں کو تختہ دار پہ لٹکایا جائے۔

علاوہ ازیں صدر ، جناب غلام محی الدین صاحب نے کہا کہ جے آئی ٹی کی رپورٹ غیر معمولی ہے جس نے نہ صرف پانامہ لیکس کی تصدیق کی بلکہ شریف برادران کی لوٹ مار کو کھول کے قوم کے سامنے رکھ دیا جس پر وہ تحسین کے مستحق ہیں۔