سردار آفتاب ایڈووکیٹ مرحوم کی تحریکی و تنظیمی خدمات کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے تعزیتی ریفرنس کا انعقاد کیا گیا

JKLF Program

JKLF Program

لیوٹن برطانیہ (تیمور لون) جموں کشمیر لبریشن فرنٹ لیوٹن برانچ کے زیر اہتمام 21 جون 26 رمضان المبارک 2017 کی شام لیوٹن کے ایک مقامی ریسٹورنٹ میں جموں کشمیر لبریشن فرنٹ آزاد کشمیر و گلگت بلتستان زون کے سابق صدر سردار آفتاب ایڈووکیٹ (مرحوم ) کی تحریکی و تنظیمی خدمات کو خراج تحسین پیش کرنے کے لیے تعزیتی ریفرنس کا انعقاد کیا گیا اور مرحوم کے ایصال ثواب کیلئے افطار ڈنر اور خصوصی دعا کا اہتمام کیا گیا۔ جس میں جے کے ایل ایف کے راہنماوں اور کارکنان سمیت دیگر سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں کے علاوہ کمیؤنٹی کے تمام مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے لوگوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی اور سردار آفتاب ایڈووکیٹ (مرحوم) کی تنظیمی و تحریکی جدوجہد کو خراج تحسین پیش کیا ـ تقریب کی صدارت برانچ کے صدر راجہ کمان آفسر نے کی جبکہ نظامت لیاقت لون نے کی تقریب کے مہمان خصوصی جے کے ایل ایف برطانیہ زون کے صدر صابر گل تھے اور دوسرے مہمان خصوصی جموں کشمیر لبریشن فرنٹ کے سفارتی شعبہ کے سربراہ پروفیسر ظفر خان تھے ـ اس موقع پروفیسر ظفر خان نے سردار آفتاب ایڈووکیٹ کی 37 سال پرمحیط طویل جدوجہد اس کے نتیجے میں دی جانے والی قربانیوں اور خدمات پرانہیں زبردست اندازمیں خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ آفتاب صاحب ایک درویش صفت انسان تھے۔

خلوص اور خودداری کی مثال تھے تحریک آذادی کشمیر میں جو ایک محب وطن کا کردار بنتاہے وہ ادا کیا اور چلیں گےـ آج ہم تمام ساتھیوں کوتحریک کے لیے جو کردار بنتا ہے اس پر سوچنا ہو گا کہ ہماری تنظیم کی جتنی بھی لیڈرشپ امان اللہ خان صاحب سے لے کر سردار آفتاب تک جہنوں نے اپنی زندگیاں تحریک کے لیے واقف کی اور اپنی جانون کی قربانی تحریک اور تنطیم کے لیے دی اُن کو بہترین خراج تحسین یہی بنتا ہے کہ اپنی صفوں میں اتحاد و اتفاق رکھتے ہوے اُن کے میشن کو پوری لگن اور یکسوئ سے جاری رکھے ـ مذید کہا آزاد کشمیر کی حکومت کا تحریک کے لیے جو کرداربنتا تھا وہ ادا نہیں کر رہی جبکہ دوسری طرف ہندوستان کی سات لاکھ فوج جو وردی کی صورت میں دشت گرد ہیں ہمارے سینے پر خونی لیکر بن کر بیٹھے ہوے ہیں اس تناطر میں حکومت پاکستان کو چاہیے کہ وہ شملہ معاہدہ سے داستبردار ہو جائے تا کہ اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل درآمد ہو سکے۔

جے کے ایل ایف برطانیہ زون کے صدر صابر گل نے کہا سردار آفتاب انسان دوست، باجرات،اور مستقل مزاج عظیم رہبر اور قائد تھےجنہوں نے اپنی پوری زندگی منقسم اور مقبوضہ مادر وطن کی وحدت کی بحالی،اس کے باسیوں کو ان کا غیرمحدود اور غیر مشروط حق خودارادیت دلوانے اوراس کی مکمل آزادی کے لئیے وقف رکھی۔اور انتہائی نامساعد حالات میں اقتدار،دولت پسندی،دھڑے بندیوں،خوشامد اورمنافقت کی سیاست سے بالا تر ہو کر اصول پرستی اور خودداری کی عظیم مثال قائم کی۔جوآنے والی نسلوں کے لئیے رول ماڈل کی حیثیت رکھتی ہے۔ جے کے ایل ایف برطانیہ زون کے جنرل سیکریٹری تحسین گیلانی نے کہا جموں کشمیر لبریشن فرنٹ تحریک کے لیے قربانیوں کی لازوال مثال ہے لیکن کھچہ لوگوں کی قربانی تاحیات یاد رکھی جائے گی اُن میں سردار آفتاب بھی ایک ہے جن کی جدوجہد ہمارے لیے مشعل راہ ہے وہ ہماری تحریک اور تنظیم کا ایک قیمتی آثاثہ تھے لیکن اب ہم اپنے محسنوں کو ان کے جانے کے بعد نہیں بلکہ ان کی حیات میں خراج تحسین پیش کرے گے. ابرار نثار نے کہا سردار آفتاب نے تحریک اور تنظیم کے لیے جو جدوجہد کی وہ بہت کم لوگوں کو نصیب ہوتی ہے اعجاز ملک نے کہا جب قاہد تحریک نے خونی لیکر توڑنے کا اعلان کیا تب سردار آفتاب نے اس ہراول دستہ کی قیادت کی اور اس وقت سے لے کر زندگی کی آخری سانس تک اپنے مقصد کے ساتھ ثابت قدمی سے جوڑے رہیے۔

جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ کے جنرل سیکریٹری آصف مسعود چوہدری نے کہا وہی قوم دنیا میں زندہ رہتی ہے جو اپنے محسنوں کو یاد رکھتی ہے آفتاب صاحب ایک انتہاہی مخلص اور ایک جمعوری رویہ رکھنے والے اصول پسند اور آذادی پسند مجاہد تھے جہنوں نے اپنی ساری زندگی مادر وطن کی آذادی و خود مختاری کی جووجہد میں گزاری اور خود داری سے حالات کا مقابلہ کیا اور کبھی بھی اپنے مقصد میں کوئ لغزش نہ دیکھائ ایسے لوگ صدیوں میں پیدا ہوتے ہیں۔

لائق علی نےکہا اب تحریک کا تقاضہ ہے کہ ہم سب کو مل کر اپنے منزل کے لیے جدوجہد کرنی ہوگی ـ کشمیر پریس کلب لندن کے صدر نواز مجید نے کہا سردار آفتاب کی جدوجہد جموں کشمیر کی وحدت اور اتحاد کی جدوجہد تھی اور اس کے لیے اُنہوں نے ہمیشہ اپنا مثبت کردار ادا کیا اور ان کا یہ کردار صدیوں یاد رکھا جائے گا ـ پی ٹی آی کے حافظ طارق نے کہا لوگ دنیا میں آتے ہیں اور چلے جاتے ہیں لیکن وہی لوگ یاد رہتے ہیں جو مقصد کے لیے جیتے ہیں اور مقصد کے لیے مرتے ہیں سردار آفتاب بھی اُن میں سے ایک تھے جن کی جدوجہد مقصد کی جدوجہد تھیں ـ غائث رشید نے کہا سردار آفتاب کو بہترین خراج تحسین ان کے نقش قدم پر چل جدوجہد جاری رکھی جائےـ تقریب کے اختتام پر سردار آفتاب کے لیے خصوصی دعا کی گئی جس کی سعادت قاری راجہ عجائب نے حاصل اور اسے کے بعد شرکا کے لیے افطار ڈنر کا اہتمام کیا گیا۔